Avalanche

برف یا مٹی کا طوفان

ماحول میں قدرتی تیز رفتاری یا انسانی سرگرمیوں کی وجہ سے برف پوش پہاڑوں کی بلندی سے ڈھال کی طرف اچانک برف کی ایک بڑی مقدار کا نہایت تیزرفتاری کے ساتھ گرنا ’’برف کا طوفان‘‘ کہلاتا ہے۔ یہ طوفان اپنی زد میں آنے والی ہر شے کو بہا لے جاتا ہے۔ پہاڑ کے اس خطے میں نیچے گرتی ہوئی برف میں ہوا اور پانی مل جاتے ہیں۔ یہ بہتی ہوئی برف ہے جو کیچڑ، پہاڑی ٹکڑے اور برف پر گرنے والے مواد سے مختلف ہوتی ہے۔ دوسری قدرتی تبدیلیوں کے برعکس جو تباہی پھیلا سکتی ہیں برف کا طوفان کبھی کبھار ہونے والے واقعات نہیں ہیں بلکہ ہر برفانی چوٹی پر عموماً وقوع پذیر ہوتے رہتے ہیں۔ اس کے بہاؤ کے نتیجے میں خوفناک تباہی پھیل سکتی ہے کیونکہ یہ اپنے ساتھ بہت تیز رفتاری سے نہ صرف برف بلکہ دوسری بہت سی اشیاء بہت طویل فاصلے تک لے کر جاتا ہے۔ انہیں اپنی خصوصیات کے اعتبار سے یا برف کی مقدار کے اعتبار سے تقسیم کیا جاتا ہے۔ اس طوفان کے حجم، جسامت اور تباہی کی صلاحیتوں کے اعتبار سے لوگارتھمی اسکیل پر اس کی 5 قسمیں بتائی گئی ہیں۔

تیاری کے مراحل

ایک ہنگامی صورت حال کے سامان کا کٹ حاصل کریں جس میں خراب نہ ہونے والا کھانا، پانی، بیٹری پر چلنے والا یا ہینڈ کرنک والا ریڈیو، اضافی فلیش لائٹ اور بیٹریاں شامل ہوں۔. آپ قابل انتقال کٹ بنا کر اپنی گاڑی میں بھی رکھ سکتے ہيں. اس کٹ میں یہ چیزیں ہونی چاہئیے:

ادویات کے نسخوں کے نقول اور طبی سامان؛ 

بستر اور کپڑے، جس میں سلیپنگ بیگ اور تکیے شامل ہوں؛ 

پانی کی بوتلیں، بیٹری سے چلنے والا ریڈیو اور اضافی بیٹریاں، ابتدائی طبی امداد کا کٹ اور فلیش لائٹ؛ 

اہم دستاویزات کے نقول: گاڑی چلانے کا لائسنس، سوشل سیکورٹی کارڈ، رہائش کا ثبوت، بیمہ پالیسیاں، وصیت نامے، قانونی دستاویزات، پیدائش اور شادی کے اسناد، ٹیکس کے ریکارڈ وغیرہ۔

اپنے گھر والوں کو تیار کريں

خاندانی ہنگامی منصوبہ بنائيں. آفت آنے پر ہوسکتا ہے کہ آپ کے گھر والے ساتھ نہ ہوں، لہذا یہ جاننا ضروری ہے کہ آپ ایک دوسرے سے رابطہ کیسے کس طرح کریں گے، آپ دوبارہ ایک دوسرے کے ساتھ کیسے آئيں گے اور آپ ہنگامی صورت حال میں کیا کریں گے۔

اپنے محلے کے اندر اور باہر ان جگہوں کی منصوبہ بندی کریں جہاں آپ کے گھر والے ملیں گے۔

ہوسکتا ہے کہ اپنے شہر میں کال کرنے کے برعکس شہر سے باہر فون کرنا زيادہ آسان ہو، لہذا ممکن ہے کہ شہر سے باہر رہنے والا کوئی شخص علیحدہ گھر والوں سے بہتر طور پر رابطہ کرسکے۔

آپ ان مقامات پر بھی ہنگامی صورت حالوں کے منصوبہ جات کے بارے میں معلوم کرسکتے ہيں جہاں آپ کے گھر والے وقت گزارتے ہیں: جائے کار، ڈے کئیر اور اسکول۔ اگر کوئی منصوبہ نہ ہو تو منصوبہ بنانے کے لئے رضاکارانہ خدمات انجام دینے کے متعلق سوچیں۔

اپنے گھر والوں کی خصوصی ضروریات پر ضرور دھیان دیں

خیال رکھنے والے افراد اور بچوں کی نگرانی کرنے والے افراد کو اپنے منصوبے سے آگاہ کریں۔

اپنے پالتو جانوروں کے لئے منصوبے بنائيں

اپنی تربیت کو جدید رکھیں۔

 

اپنے گھر کو تیار کریں

زمین کے مناسب استعمال کے طریقوں کو اپنا کرزمین کھسکنے کے عمل کیلئے تیار رہیں – تیز ڈھلانوں یا قدرتی کٹاؤ سے بنی گھاٹیوں کے نزدیک عمارت نہ بنائیں۔

اپنے آس پاس کی زمین سے واقف رہیں۔ مقامی اہلکاروں سے مل کر معلوم کریں کہ آیا آپ کے علاقے میں ملبے کے بہاؤ کا واقعہ ہوا ہے۔ ایسی ڈھلانیں جہاں ماضی میں ملبے گرے ہوں وہاں آئندہ بھی اس کا امکان رہتا ہے۔

زمینی منظر اور پانی کی نکاسی میں تبدیلیوں، یا بنیادوں یا پیدل راستوں میں بنی نئی دراڑوں پر نگاہ رکھیں۔

اپنے گھر یا کاروبارکیلئے موزوں انسدادی پیمانوں کے بارے میں کسی پیشہ ور فرد سے بات کریں، جیسے پائپ کی لچیلی فٹنگ، جو ٹوٹنے عمل کو بہتر طور پر روک سکے۔

اپنے گھر یا کاروبار کے قریب ڈھلان پر طوفان کے پانی کی نکاسی کی ترتیب کو دیکھیں، اور ان جگہوں کو نوٹ کرلیں جہاں نکاسی والا پانی جاتا ہے۔ اپنے گھر یا کاروبارکے گرد پہاڑیوں کی ڈھلان پر زمین کی حرکت کی علامات پرنظر رکھیں، جیسے زمین کا معمولی حد تک کھسکنا یا ملبے کا بہاؤ یا رفتہ رفتہ جھکتے ہوئے پیڑ۔